صدر آزاد کشمیر

کشمیریوں نے بھارتی انتخاب مسترد کر دیے.صدر آزاد کشمیر

اسلام آباد گزشتہ روز صدر آزاد کشمیر سردار مسعود خان نے کہا کہ کشمیریوں نے بھارتی ڈھونگ انتخابات کو مسترد کر دیا جس پر علی گیلانی،میرواعظ فاروق یسین ملک آسیہ اندرابی و دیگر قیادت کو خراج تحسین پیش کرتے ہیں
ان خیالات کا اظہار انہوں نے کشمیر انسٹیٹیوٹ آف انٹرنیشنل ریلیشنز کے ڈائریکٹر الطاف وانی سے گفتگو کرتے ہوئے کیا جنہوں نے بدھ کو جموں و کشمیر ہائوس میں ان سے ملاقات کی اور انہیں جنیوا میں منعقد ہونے والے اقوام متحدہ کی انسانی حقوق کونسل کے 39ویں اجلاس کے موقع پر کشمیری وفد کی کار کردگی سے آگاہ کیا۔

صدر سردار مسعود خان نے الطاف وانی اور وفد کے دیگر ارکان کی کوششوں کی تعریف کرتے ہوئے کہا کہ کشمیری عوام اور پاکستان نے یہ تہیہ کر رکھا ہے کہ اقوام متحدہ کے انسانی حقوق کمیشن کی رپورٹ کو بنیاد بنا کر پوری دنیا میں مہم چلائیں گے اور بھارت کے مکروہ چہرے کو بے نقاب کریں گے کیونکہ اقوام متحدہ کی رپورٹ نے عالمی سطح پر مسئلہ کشمیر کے حوالے سے جاری سکوت کو توڑا ہے۔

انہوں نے کہا کہ برطانیہ اور یورپین پارلیمان کی مقبوضہ جموں و کشمیر میں انسانی حقوق کی صورتحال پر رپورٹس بھی جلد شائع ہوں گے ۔ صدر سردار مسعود خان نے کہا کہ یہ بات نہایت خوش آئند ہے کہ اب دنیا کے اہم ذرائع ابلاغ بھی کشمیر کی طرف متوجہ ہو رہے ہیں جس کا ثبوت حالیہ دنوں میں نیشنل جیو گرافی، نیو یارک ٹائمز، الجزیرہ اور گارڈین میں کشمیر کے حوالے سے شائع ہونے والی رپورٹس، تجزیے اور اداریے ہیں۔
انہوں نے کہا کہ مقبوضہ جموں و کشمیر میں قابض بھارتی فوج نے جس بیدردی اور سفاکی سے کشمیری نوجوانوں کوبینائی سے محروم کیا اس نے دنیا کے ضمیر کوہلا کر رکھ دیا ہے اور یہ موقع ہے کہ اہل جموں و کشمیر ، پاکستان اور کشمیری تارکین وطن اپنی قوتوں کو مجتمع کریں اور بین الاقوامی ضمیر کو مقبوضہ جموں و کشمیر کی صورتحال پر مزید جھنجوڑیں۔ مقبوضہ جموں و کشمیر میں نام نہاد اور جعلی انتخابات پر تبصرہ کرتے ہوئے صدر نے کہا کہ بھارت کا انتخابی ناٹک پہلے کبھی کامیاب ہوا اور نہ ہی آئندہ کبھی کامیاب ہو گا۔
تحریک مزاحمت کے قائدین جناب سید علی گیلانی، میر واعظ عمر فاروق ، اور یاسین ملک، آسیہ اندرابی کی اولالعزمی پر انہیں شاندار الفاظ میں خراج تحسین پیش کرتے ہوئے صدر نے کہا کہ بھارت مقبوضہ کشمیر میں نام نہاد پنجایتی الیکشن کرا کر دنیا کو یہ تاثر دینے کی کوشش کر رہا تھا کہ مقبوضہ کشمیر میںحالات معمول کے مطابق ہیں لیکن کشمیری عوام نے ان انتخابات کو موثر بائیکاٹ کر کے بھارت کے تمام مذموم منصوبوں کو ناکام بنا دیا ہے جس پر وہ مبارکباد کے مستحق ہیں۔
صدر سردار مسعود خان انتخابی ڈرامے کے خلاف جاری مہم کے دوران کل جماعتی حریت کانفرنس اور مشترکہ مزاحمتی قیادت کے قائدین اور کارکنوں کی گرفتاریوں کی شدید مذمت کرتے ہوئے اسے بھارتی حکومت کی بو کھلاہٹ قرار دیا ۔انہوں نے آسیہ اندرابی سمیت تمام گرفتار قائدین اور سیاسی کارکنوں کی فوری رہائی ان کے خلاف قائم بلا جواز مقدمات واپس لینے کا مطالبہ کیا گیا۔
صدر سردار مسعود خان نے کہا کہ مقبوضہ کشمیر کے عوام آزادی اور حق خود ارادیت کیلئے جدوجہد کر رہے ہیں اور کوئی انتخابات استصواب رائے یا حق خود ارادیت کا متبادل نہیں ہو سکتے۔ انہوں نے کہا کہ لائن آف کنٹرول کے دونوںحجانب بسنے والے جموں و کشمیر کے عوام آزادی اور حق خود ارادیت کی منزل کے حصول تک اپنی جدوجہد بلا تعطل جاری کے لیے پر ُعزم ہیں ۔
بھارت کے مظالم اور سازشیں کشمیری عوم کے عزم کو کمزور کر سکتی ہیں اور نہ ہیں اُنہیں دھوکہ دے سکتی ہیں۔ سردار مسعود خان نے عالمی برادری خصوصاً اقوام متحدہ سے اپیل کی کہ وہ مقبوضہ کشمیر انسانی حقوق کی پامالی اور نہتے عوام پر مظالم بند کرانے کیلئے مؤثر اقدامات اٹھائے۔ صدر آزادکشمیر نے مسئلہ کشمیر کو بین الاقوامی سطح پر موثر انداز میں اُجاگر کرنے پر کشمیر انسٹیٹیوٹ آف انٹرنیشنل ریلیشنز کے کردار کی بھی تعریف کی ۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں