Asif Saeed Khosa

چیف جسٹس آصف سعید کھوسہ نے تہرے قتل کے ملزم کی ضمانت منظور کر لی

لاہور (سحر نیوز) : چیف جسٹس آف پاکستان جسٹس آصف سعید کھوسہ (Asif Saeed Khosa) نے تہرے قتل کے ملزم کی ضمانت منظور کر لی۔ تفصیلات کے مطابق سپریم کورٹ لاہور رجسٹری میں چیف جسٹس آف پاکستان جسٹس آصف سعید کھوسہ (Asif Saeed Khosa) کی سربراہی میں 2 رکنی بنچ نے تہرے قتل کے ملزم کی درخواست ضمانت کی سماعت کی۔ جسٹس آصف سعید کھوسہ نے ریمارکس دیئے کہ قانون کی مطابق فیصلے سے ایک روزپہلے بھی عدالت درست سمجھے توضمانت لے سکتی ہے، کسی بے گناہ کو ایک دن بھی جیل میں نہیں رہنا چاہئیے۔
دوران سماعت ملزم کے وکیل سجاد قمر نے عدالت کو بتایا کہ دبئی میں ملازمت کے دوران پاکستان میں تہرے قتل کا مقدمہ درج کیا گیا۔ پولیس کو بیرون ملک ہونے کے تمام ثبوت دیئے مگرپاکستان واپس آنے پرگرفتار کرلیا گیا۔

چیف جسٹس آصف سعید کھوسہ (Asif Saeed Khosa) نے ریمارکس دیئے ہیں کہ ہمارا مسئلہ ہے ہم قانون نہیں پڑھتے۔ قانون کی مطابق فیصلے سے ایک روزپہلے بھی عدالت درست سمجھے توضمانت لے سکتی ہے،کسی بے گناہ کو ایک دن بھی جیل میں نہیں رہنا چاہئیے۔

یہ بھی پڑھیں.بے حیائی کی انتہا ماموں اپنی 14 سالہ بھانجی کو لے اُڑا

عدالت نے تہرے قتل کے ملزم کی ضمانت منظورکر لی۔ مدعی کے وکیل کا کہنا تھا کہ گواہان کی شہادتیں ریکارڈ ہوچکی ہیں لہٰذاملزم کی ضمانت منظور نہ کی جائے۔خیال رہے کہ 18 جنوری 2019ء کو جسٹس آصف سعید کھوسہ نے پاکستان کے 26 ویں چیف جسٹس کی حیثیت سے حلف اُٹھایا تھا۔ جسٹس آصف سعید کھوسہ اپنا منصب سنبھالتے ہی ان ایکشن نظر آئے۔ چیف جسٹس کا منصب سنبھالنے کے پہلے روز انہوں نے 3 مقدمات سنے جس کے بعد سے اب تک چیف جسٹس آصف سعید کھوسہ زیر التوا مقدمات نمٹانے میں مصروف ہیں۔ پاکستان کے 26 ویں چیف جسٹس جسٹس آصف سعید خان کھوسہ 20 دسمبر 2019ء کو اپنے عہدے سے ریٹائر ہو جائیں گے، جس کے بعد جسٹس گلزار احمد چیف جسٹس کے عہدے پر فائز ہوں گے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں