سابق وزیراعظم شاہد خاقان عباسی (shahid khaqan abbasi)کو گرفتار کر لیا گیا

shahid khaqan abbasi

شاہد خاقان عباسی (shahid khaqan abbasi)کو لاہور ٹول پلازہ سے گرفتار کیا گیا

اہور (سحرنیوزتازہ ترین اخبار۔ 18 جولائی 2019ء) : سابق وزیراعظم شاہد خاقان عباسی (shahid khaqan abbasi)
کو گرفتار کر لیا گیا۔ تفصیلات کے مطابق سابق وزیراعظم شاہد خاقان عباسی کو
لاہور کے ٹول پلازہ سے گرفتار کر لیا گیا ۔ خیال رہے کہ نیب نے آج سابق وزیراعظم شاہد خاقان عباسی کو طلب کر رکھا تھا
لیکن انہوں نے نیب کے سامنے پیش ہونے سے معذرت کر لی تھی۔ نیب راولپنڈی نے
شاہد خاقان عباسی (shahid khaqan abbasi)کو ایل این جی ٹرمینل کا غیر قانونی ٹھیکہ دینے کے
الزام میں تفتیش کے لیے طلب کیا تھا اور سابق وزیراعظم کو صبح 10 بجے نیب راولپنڈی میں پیش
ہونے کی ہدایت کی گئی تھی لیکن وہ پیش نہیں ہوئے۔
واضح رہے کہ گذشتہ سال چیئرمین نیب جسٹس (ر) جاوید اقبال کی زیر صدارت ہونے والے اجلاس میں
سابق وزرائے اعظم نواز شریف اور شاہد خاقان عباسی (shahid khaqan abbasi)کے خلاف بدعنوانی
اور اختیارات کے ناجائز استعمال کے الزامات کی تحقیقات کی منظوری دی گئی تھی۔

آج لب گہر فشاں آپ نے وا نہیں کیا

نیب کے مطابق شاہد خاقان عباسی (shahid khaqan abbasi)کے خلاف ایل این جی ٹرمینل کا ٹھیکہ قواعد
و ضوابط کے خلاف دینے کے الزام میں تحقیقات کا آغاز کیا گیا۔

سابق وزیراعظم شاہد خاقان نے من پسند کمپنی کو 15 سال کا ٹھیکہ خلاف ضابطہ دیا جس سے قومی خزانے
کو مبینہ طور پر اربوں روپے کا نقصان پہنچا۔ دوسری جانب گذشتہ روز چئیرمین نیب جسٹس (ر) جاوید اقبال
نے اپنے بیان میں کہا تھا کہ ادارہ ’’احتساب سب کے لیے‘‘ کی پالیسی پر گامزن ہے۔ انہوں نے اس عزم کا
اعادہ کرتے ہوئے کہا کہ بدعنوانی ناسور اور ملکی ترقی و خوشحالی میں سب سے بڑی رکاوٹ ہے۔

افسران بدعنوانی کے خاتمے کو قومی فریضہ سمجھتے ہیں ،لوٹے ہوئے 326 ارب قومی خزانے میں
جمع کروانا ریکارڈ کامیابی ہے ۔ چیئرمین نیب جسٹس (ر) جاوید اقبال نے کہا کہ میگا گرپشن کے مقدمات
کو منطقی انجام تک پہنچانا ہماری اولین ترجیح ہے ۔ بدعنوان عناصر، اشتہاری اور مفرور ملزمان کے
مقدمات منطقی انجام تک پہنچے کے لیے تمام وسائل بروکار لائے جائیں گے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں