افغانستان(afghanistan) دھماکے میں 24 افراد جاں بحق اور 30 زخمی

afghanistan

بین الاقوامی خبر رساں اداروں کے مطابق افغانستان(afghanistan) کے شمالی صوبہ پروان کے دارالحکومت چاریکار میں صدر اشرف غنی کی
قیادت میں ریلی نکالی جارہی تھی کہ اس دوران ایک زوردار بم دھماکا ہوا۔ حملے میں 24 افراد جاں
بحق اور 30 زخمی ہوئے جبکہ صدر اشرف غنی محفوظ رہے۔

بم ڈسپوزل اسکواڈ کے مطابق یہ مقناطیسی بم کا دھماکا تھا جسے ایک پولیس موبائل میں نصب
کیا گیا تھا۔ صوبائی حکومت کی خاتون ترجمان وحیدہ شاہکار نے بتایا کہ افغان صدر کا جلسہ
اور ریلی جاری تھی کہ اس دوران داخلی مقام پر دھماکا ہوا۔ جاں بحق ہونے والوں میں خواتین
اور بچوں سمیت عام شہری بھی شامل ہیں۔ تاحال کسی گروپ نے حملے کی ذمہ داری قبول نہیں کی۔

آئل ریفائنری پر ڈرون حملوں کے بعد امریکی صدر(american sadar) نے سعودی عرب کو دفاعی تعاون کی پیشکش

دھماکے کے وقت صدر اشرف غنی جلسے سے خطاب کر رہے تھے۔صدر اشرف غنی کی انتخابی
مہم کے ترجمان حمید عزیز نے اس حوالے سے بتایا ہے کہ دھماکے کے وقت اشرف غنی بھی
موجود تھے لیکن وہ محفوظ ہیں اور انہیں کسی قسم کا کوئی نقصان نہیں پہنچا۔افغان میڈیا کا مزید
کہنا ہے کہ کسی بھی گروپ نےتاحال حملے کی ذمہ داری قبول نہیں کی۔خیال رہے اس ماہ کے
آخر میں افغانستان(afghanistan) میں صدارتی انتخابات کی تیاری کے حوالے سے انتخابی مہم جاری ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں