شیخوپورہ(Sheikhupura)، بیٹی کے ساتھ ڈیوٹی سرانجام دینے کی تصویر وائرل

Sheikhupura

تفصیلات کے مطابق سوشل میڈیا پر شیخوپورہ(Sheikhupura) میں تعینات خاتون پولیس افسر
اے ایس پی عائشہ بٹ کی اپنی بیٹی کے ہمراہ ڈیوٹی سر انجام دینے کی تصویر
وائرل ہو گئی، اس تصویر پر اے ایس پی عائشہ بٹ نے رد عمل دیتے ہوئے
کہا کہ ایسا کرنا مشکل ضرور تھا لیکن نا ممکن نہیں تھا ۔
عائشہ بٹ اپنی دوشیزہ بیٹی کو اپنے ہمراہ ڈیوٹی پر لاتی ہیں اور پھر بیٹی
کو گود میں لیے اپنے تمام تر فرائض بخوبی سرانجام دیتی ہیں جس پر ان
کے ساتھی افسران بھی ان کے معترف ہیں۔ اے ایس پی عائشہ کے ساتھی
افسران کا کہنا ہے کہ عائشہ نے ڈیوٹی اور ذمہ داری ایک ساتھ ادا کرکے
تمام خواتین کے لیے ایک اعلیٰ مثال قائم کی ۔
سوشل میڈیا صارفین نے اے ایس پی عائشہ بٹ کی بچی کے ہمراہ تصاویر
پر ان کے اپنے کام سے لگاؤ کی خوب تعریف کی ۔

لاہور(lahore) سموگ کاباعث بن رہاہے،شفیق ر ضا قادری

صارفین کا کہنا تھا کہ اے ایس پی عائشہ بٹ کی کام سے لگن دیکھ کر یہ کہنا
غلط نہیں ہو گا کہ واقعی اگر خواتین چاہیں تو کچھ بھی کر سکتی ہیں، خواتین
اپنی صلاحیتوں اور قابلیت کی وجہ سے دنیا بھر میں اپنا لوہا منوا سکتی ہیں
اور اس کے لیے وہ کسی بھی حد تک جانے اور کسی قسم کی رکاوٹ عبور
کرنے سے بھی گریز نہیں کرتیں۔ ان کے حوالے سے موصول ہونے والی
اطلاعات کے مطابق عائشہ بٹ ایس ڈی پی او فیروز والا سرکل شیخوپورہ(Sheikhupura)
میں پولیس افسر تعینات ہیں۔
جبکہ ان کے شوہر اے ایس پی عبدالوہاب خان اسلام آباد میں اپنے فرائض
سرانجام دے رہے ہیں۔ خیال رہے کہ آج کل کے دور میں خواتین کسی بھی
شعبے میں مردوں سے کسی طور کم نہیں ہیں۔ اس سے قبل بھی مردوں کے
شانہ بشانہ کام کرنے والی ایک خاتون کی چند تصاویرسوشل میڈیا پر
وائرل ہوئی تھیں جنہوں نے ”Work comes first” کی ایک نئی مثال قائم
کر دی تھی۔ پشاور کی ایڈشنل اسسٹنٹ کمشنر سارہ تواب تجاوزات کے
خلاف آپریشن کے دوران اپنے شیر خوار بچے کو اُٹھا کر نوکری کے
فرائض انجام دیتی رہی ہیں۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں