سموگ ختم ہو جاتی تھی ۔ شہری عمران خان(imran khan) پر برس پڑا

imran khan

موجودہ حکمران جماعت پاکستان تحریک انصاف کے دور حکومت میں
مہنگائی میں جس قدر اضافہ ہوا اُس کے بعد سے ہی عوام موجودہ حکومت
سے بد ظن اور مایوس ہونے لگی ۔ حال ہی میں نجی ٹی وی چینل سے بات
کرتے ہوئے ایک بزرگ شہری نے کہا کہ اسموگ نے میری آنکھیں
خراب کر دی ہیں، میری آنکھوں میں نے حد خارش ہوتی ہے۔
ماسک سے متعلق سوال کے جواب میں انہوں نے کہا کہ مجھے اللہ تعالیٰ
بچا رہا ہے میں نے ماسک کیا کرنا ہے؟ قدرت پر جس کو بھروسہ ہو اُس
کا ماسک کیا کر لے گا۔ انہوں نے کہا کہ خدا کا واسطہ ہے کوئی
عمران خان(imran khan) سے کہے کہ چلا جائے، ملک کا بیڑہ غرق نہ کرے ورنہ
اسے قبر میں زبردست عذاب پڑے گا۔ انہوں نے کہا کہ عمران خان نے
وکیلوں کو بھی پیسہ کھلوایا ، میرے سامنے وکلا نے قسم کھا کر کہا
کہ ہمیں عمران خان(imran khan) فی بندہ تین ، تین ہزار روہے دیتا رہا ہے۔

تیسری شادی سے متعلق سوال پر ریحام خان(reham khan) کا جواب

بزرگ شہری کا کہنا تھا کہ ملک میں اسموگ پڑ رہی ہے ، انہوں نے
کیا کرنا ہے ۔ یہ لوگ بارشیں برسانے کی بات کر رہے ہیں اور اللہ کے
شریک بن رہے ہیں۔ شہباز شریف اللہ سے دعا کرتا تھا تو بارش پڑ جاتی
تھی اور اسموگ ختم ہوجاتی تھی۔ انہوں نے کہا کہ عمران خان کا
شہباز شریف سے کوئی مقابلہ نہیں ہے۔ شہری کا کہنا تھا کہ موجودہ
حکومت کو لاہور سے اتنی محبت نہیں ہے اسی لیے اس شہر کا خیال
نہیں رکھا جا رہا ، انہوں نے کہا کہ شہر میں سڑکیں بھی ٹوٹی ہوئی
ہیں، انہوں نے کہا کہ عمران خان(imran khan) اس ملک میں کچھ بھی نہیں کر
سکے گا کیونکہ یہاں اگر کوئی کسی بچی کی زندگی بھی تباہ کر دے
تب بھی کچھ نہیں ہوتا ، نہ ہی کسی کو انصاف ملتا ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں