new Pakistan Housing Scheme

نیا پاکستان ہاؤسنگ اسکیم (new Pakistan Housing Scheme) کے لیے لاہور میں جگہ کا انتخاب کر لیا گیا

لاہور(سحر نیوز) نیا پاکستان ہاؤسنگ سکیم (new Pakistan Housing Scheme) کے لئے دیگر اضلاع کی طرح لاہور میں بھی جگہ کا انتخاب کر لیا گیا ہے۔حکومت پنجاب کی طرف سے ڈی سی کو منصوبے کے لیے جگہ دینے کا حکم ملا تھا۔ڈی سی صالحہ سعید نے ریونیو افسران کو پانچوں تحصیلوں میں سرکاری زمینوں کی تلاش کرنے کا کہا تھا جس پر 784 کنال اور 9 مرلے زمین کا انتخاب کر لیا گیا۔
جس کی رپورٹ اعلی حکام کو بھی ارسال کر دی گئی ہے نیا پاکستان ہاؤسنگ سکیم (new Pakistan Housing Scheme) کے تحت ریونیو ڈیپارٹمنٹ نے تین تحصیلوں میں جگہوں کی رپورٹ بھجوادی۔تحصیل ماڈل ٹاؤن میں موضوع چک آصو 179 کنال 8 مرلہ تحصیل،کینٹ بیدیاں روڈ پر 106 کے کنال،موضع دھو لوں کلاں میں 387 کنال تلاش کی گئی۔اسی طرح رائیونڈ موضع خرد پورہ 87 اور کٹار 29 کنال 8 مرلے زمین تلاش کی گئی ہے۔ (new Pakistan Housing Scheme)

ان تمام زمینوں کی قیمت 50 کروڑ روپے سے زائد ملکیت کی بتائی جا رہی ہے۔رپورٹ محکمہ ریونیو کے ذریعہ حکومت پنجاب کو بھجوا دی گئی ہے جو اس پر فیصلہ کریں گے۔خیال رہے نیا پاکستان ہاوسنگ سیکم میں کم آمدنی والے پچاس لاکھ افراد کو گھر دیئے جائینگے۔اس منصوبہ سے نہ صرف ملکی معشیت کو فائدہ ہوگا بلکہ روزگار کےد عمران خان نے وزارت عظمیٰ کا منصب سنبھالنے کے 2 ماہ کے اندر ہی ”نیا پاکستان ہاؤسنگ اسکیم” منصوبے کی بنیاد رکھی۔
وزیراعظم عمران خان کے اس وژن اور حکومت کے اس فلیگ شپ منصوبے کو پایہ تکمیل تک پہنچانے کے لیے فیڈرل گورنمنٹ ایمپلائز ہاؤسنگ فاؤنڈیشن (FGEHF) نے غیرملکی نجی کمپنیوں سے رابطہ کیا تاکہ ان کمپنیوں میں موجود تکنیکی اور معاشی ماہرین کی خدمات بھی حاصل کی جا سکیں۔ اپنے اشتہار میں ہاؤسنگ فاؤنڈیشن نے ملکی و غیر ملکی کمپنیوں سے اراضی فراہم کرنے کا مطالبہ کیا تھا اور ہدایات کی تھیں کہ یہ اراضی مین روڈ کے ساتھ یا پھر وہاں سے مین روڈ پر آسان رسائی حاصل ہو۔
اس اراضی میں بجلی ، گیس اور پانی کی سہولیات کی فراہمی لازم قرار دی گئی جبکہ صرف اراضی کے اصل مالک ہی اس پروگرام میں اپلائی کر سکتے ہیں۔ مواقع بھی پیداہونگے۔ وزرات ہاوسنگ اینڈ ورکس کی طرف سے جاری کردہ 100روزہ پراگراس رپورٹ کے مطابق حکومت ان خاندانوں کو نیا پاکستان ہاوسنگ سیکم (new Pakistan Housing Scheme) میں گھر دینے میں دلچسپی رکھتی ہے جوکہ اپنے گھر بنانے کا سوچ بھی نہیں سکتے ہیں۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں