Asif Ali Zardari

سپریم کورٹ نے آصف زرداری کی نا اہلی کے لیے دائر درخواستیں اعتراض لگا کر واپس کر دیں

اسلام آباد (سحر نیوز) : سپریم کورٹ آف پاکستان نے سابق صدر آصف علی زرداری (Asif Ali Zardari) کی نا اہلی کے لیے دائر درخواستیں اعتراض لگا کر واپس کر دیں۔ تفصیلات کے مطابق رجسٹرار سپریم کورٹ نے سابق صدر آصف علی زرداری (Asif Ali Zardari) کی نا اہلی کے لیے دائر کی جانے والی درخواستیں اعتراض لگا کر واپس کر دیں۔ رجسٹرار سپریم کورٹ کے مطابق درخواستگزاروں نے متعلقہ فورم سے رجوع نہیں کیا۔
مناسب فورم ہونے کے باوجود درخواستگزاروں نے سپریم کورٹ سے رجوع کیا۔ یاد رہے کہ دو روز قبل پاکستان تحریک انصاف نے سابق صدر آصف علی زرداری کی نا اہلی کے لیے سپریم کورٹ آف پاکستان سے رجوع کیا تھا۔ تفصیلات کے مطابق سپریم کورٹ آف پاکستان میں سابق صدر آصف علی زرداری کی نااہلی کے لیے پاکستان تحریک انصاف کے رہنماؤں عثمان ڈار اور خرم شیر زمان کی جانب سے دائر کی گئیں۔

درخواستیں آصف زرداری (Asif Ali Zardari) کے امریکہ میں مبینہ فلیٹ کی دستاویزات اور ظاہر نہ کیے جانے پر ان کے اثاثوں کی تفصیلات ساتھ جمع کروائی گئی ہیں۔ درخواستوں میں سابق صدر اور رکن قومی اسمبلی آصف علی زرداری کی آئین کے آرٹیکل 62ون ایف کے تحت تاحیات نا اہلی کی استدعا کی گئی ہے۔ درخواستوں میں آصف علی زرداری کی جانب سے چھُپائے گئے اثاثوں کی تفصیلات بھی شامل ہیں۔

یہ بھی پڑھیں.پکڑ دھکڑ جاری رکھی تو کرسی نہیں بچے گی

درخواست میں کہا گیا کہ آصف علی زرداری نے بیرون ملک کروڑوں روپے کی جائیداد بنائی لیکن اپنے اثاثے چھُپائے۔ آصف زرداری کے نیویارک میں مین ہیٹن اپر ایسٹ میں پانچ لاکھ 30 ہزار ڈالر مالیت کے اپارٹمنٹس کی تفصیلات بھی درخواست کے ساتھ شامل ہیں۔ قبل ازیں رواں ماہ 10 جنوری کو پاکستان تحریک انصاف کے رکن سندھ اسمبلی خرم شیرزمان نے پاکستان پیپلزپارٹی کے شریک چیئرمین آصف علی زرداری کی نا اہلی کے لیے الیکشن کمیشن میں دائر درخواست واپس لے لی تھی۔

خرم شیرزمان کا کہنا تھا کہ آصف علی زرداری (Asif Ali Zardari) کے خلاف سپریم کورٹ میں پٹیشن دائرکریں گے، سندھ کے لوگ تیارہوجائیں آصف زرداری کی وکٹ اُڑنے والی ہے۔ واضح رہے کہ گذشتہ دنوں وفاقی وزیر علی زیدی نے سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹویٹر پر آصف علی زرداری کی امریکہ میں موجود مبینہ جائیدادوں کی دستاویزات کی تصاویر بھی شیئرکی تھی۔ واضح رہے کہ آصف علی زرداری 25 جولائی 2018ء کو ہونے والے عام انتخابات میں این اے 213 نواب شاہ سے ممبر قومی اسمبلی منتخب ہوئے تھے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں