Chaudhary Fawad

عمران، ٹرمپ ملاقات افغان امن مذاکرات کے بعد ممکن ہے، فواد چودھری

لاہور(سحر نیوز) وفاقی وزیر اطلاعات ونشریات فواد چودھری (Fawad Chaudhary) نے کہا ہے کہ عمران خان، ٹرمپ ملاقات افغان امن مذاکرات کے بعد ہوسکتی ہے، پاکستان میں تمام بڑی پالیسیاں اتفاق رائے سے بنائی جا رہی ہیں، پاکستان میں حکومت اور فوج ایک پیج پر ہیں۔ میڈیا رپورٹس کے مطابق وزیر اطلاعات فواد چودھری نے متحدہ عرب امارات کے اخبارکو انٹرویو میں بتایا کہ افغان طالبان کو مذاکرات کی میز پر لانے پر امریکی صدر ٹرمپ پاکستان سے خوش ہیں۔
ٹرمپ کی خوش ہی ہے کہ امریکی صدر نے پاکستان کیلئے پالیسی تبدیلی کی ہے۔ فواد چودھری نے کہا کہ افغانستان میں امن واستحکام سے نہ صرف امریکا بلکہ پاکستان کو بھی فائدہ ہوگا۔ انہوں نے کہا کہ امریکی صدر ٹرمپ اور وزیراعظم پاکستان عمران خان کے درمیان ملاقات افغان امن مذاکرات کے بعد ہوسکتی ہے۔

فواد چودھری (Fawad Chaudhary) نے ایک سوال پر کہا کہ پاکستان میں تمام بڑی پالیسیاں اتفاق رائے سے بنائی جا رہی ہیں، پاکستان میں حکومت اور فوج ایک پیج پر ہیں۔

یہ بھی پڑھیں.حکومت کی مشکلات کم نہ ہوئیں

انہوں نے کہا کہ بھارت کے ساتھ الیکشن کے بعد مذاکرات کیلئے تیار ہیں۔ کیونکہ بھارت کی موجودہ لیڈرشپ کی جانب سے کسی بڑے فیصلے کی توقع نہیں ہے۔ بھارت میں انتخابات کا ماحول ہے اس لیے الیکشن کے پیش نظر بھارت سے بات چیت کا وقت بھی مناسب نہیں ہے۔ انہوں نے کہا کہ الیکشن کے بعد بھارت میں مودی کی حکومت ہو یا پھر راہول گاندھی کی حکومت ہو، پاکستان بھارت کے ساتھ مذاکرات کیلئے تیار ہے۔
تاہم پاکستان نے الیکشن کے باعث بھارت سے مذاکرات کی کوشش فی الحال مئوخرکردی ہے۔ واضح رہے وفاقی وزیراطلاعات ونشریات فواد چودھری پی ایس ایل سیزن فورکی افتتاحی تقریب ”میدان سجانا ہے“میں شرکت کیلئے دبئی گئے ہیں۔ فواد چودھری کے ہمراہ وزیراعظم کے مشیر زلفی بخاری بھی دبئی کے دورے پر ہیں۔ فواد چودھری (Fawad Chaudhary) دبئی میں بزنس کمیونٹی کے نمائندوں سے ملاقاتیں کریں گے جبکہ دبئی میں مقیم سرمایہ کاروں کوسازماحول اور معاشی اصلاحات سے آگاہ کریں گے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں