allegedly abused

اسلام آباد ، وکیل کی قانون کی طالبہ کو دھوکہ سے اپنے فلیٹ پر بلا کر مبینہ زبردستی زیادتی

اسلام آباد (سحر نیوز) اسلام آباد کے وکیل نے قانون کی طالبہ کو دھوکہ سے اپنے فلیٹ پر بلا کر مبینہ طور پر زبردستی زیادتی (allegedly abused) کا نشانہ بنا ڈالا. پولیس نے متاثرہ طالبہ کی درخواست پر مقدمہ درج کرکے تفتیش شروع کردی ہی.

یہ بھی پڑھیں.پی ایس 94 ضمنی الیکشن: ایم کیوایم نے انتخابی میدان مار لیا

مدعیہ مقدمہ سدرہ ریاض نے پولیس تھانہ شمس کالونی کو بتایاکہ میں تھانہ رمنا میں درج اپنے اغوائ کے مقدمہ کے لیے ایف ایٹ کچہری گئی جہاں اسد ہاشمی نامی وکیل سے ملاقات ہوگئی جس نے مقدمہ بارے ڈسکس کرنے کے لیے مجھے اپنے فلیٹ پر بلایا.27جنوری کی رات نو بجے جب میں اسد ہاشمی کے بتائے ہوئے ایڈریس سیکٹر ایچ تیرہ میں واقع فلیٹ پر پہنچی تو اسد ہاشمی نے مجھے کمرے میں بند کرکے رات بھر زبردستی زیادتی (allegedly abused) کانشانہ بنایا.صبح موقع ملنے پر ون فائیو پر کال کی جس پر اسد ہاشمی نے فلیٹ سے باہر نکال دیا اور فرار ہو گیا.

پولیس نے مقدمہ درج کرکے تفتیش شروع کردی ہی. (allegedly abused)

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں