security in Punjab

پنجاب میں سکیورٹی ہائی الرٹ رکھنے کی ہدایت کر دی گئی

لاہور (سحر نیوز) : پنجاب بھر میں سکیورٹی ہائی الرٹ (security in Punjab) رکھنے کا فیصلہ کر لیا گیا ہے۔ تفصیلات کے مطابق پنجاب بھر میں سکیورٹی اداروں کو صوبے بھر میں سکیورٹی کے سخت انتظامات کرنے اور سکیورٹی ہائی الرٹ رکھنے کی ہدایت کر دی گئی ہے۔ یہ فیصلہ لورالائی میں دہشت گردوں کے حملہ کے تناظر میں کیا گیا جس کے تحت محکمہ داخلہ حکومت پنجاب نے پنجاب پولیس، سپیشل برانچ، سی ٹی ڈی سمیت دیگرقانون نافذ کرنے والے اداروں کو سکیورٹی معاملات کو روزانہ کی بنیاد پر اپ گریڈ کرنے کی ہدایات جاری کی گئیں۔
ہدایات میں کہا گیا کہ سرکاری دفاتر میں آنے والے سائلین کو صرف اور صرف اصل قومی شناختی کارڈ چیک کرنے کے بعد ہی داخل ہونے کی اجازت دی جائے ۔ ایس او پیز پر عمل درآمد یقینی بنایا جائے ۔

یہ بھی پڑھیں.آسیہ بی بی کسی بھی وقت پاکستان چھوڑ سکتی ہیں

اس کے علاوہ آئی جی پنجاب نے بھی صوبے بھر میں سکیورٹی ہائی الرٹ (security in Punjab) کرنے کا حکم جاری کرتے ہوئے اہم سرکاری دفاتر ، پولیس ٹریننگ کالجز، سکولز اورپولیس لائنز کے علاوہ عبادت گاہوں ، تعلیمی اداروں ، پارکوں ، مارکیٹوں ، ریلوے اسٹیشنز اور بس ٹرمینل کی سکیورٹی ہائی الرٹ کرنے کی ہدایات دے دی ہیں۔

میڈیا رپورٹ کے مطابق آئی جی پنجاب نے تمام فیلڈ افسران کو شہروں اور اضلاع کے داخلی اور خارجی راستوں پر چیکنگ کا نظام مزید سخت کرنے کے ساتھ ساتھ اپنی ذاتی حفاظت کو بھی یقینی بنانے کی ہدایت کرتے ہوئے صوبائی چیک پوسٹوں پر نقل و حرکت کی نگرانی مزید مؤثر بنانے کے احکامات بھی جاری کیے ہیں۔ یاد رہے کہ گذشتہ روز لورالائی میں پولیس میں بھرتی کے لیے ٹیسٹ کے دوران ڈی آئی جی دفتر پر خودکش حملے اور فائرنگ کے نتیجے میں پولیس اہلکاروں سمیت 9 افراد شہید،21 افراد زخمی ہوگئے تھے۔ اسی حملے کے تناظر میں اب پنجاب میں سکیورٹی ہائی الرٹ رکھنے کا فیصلہ کیا گیا ہے۔ (security in Punjab)

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں