حوثی باغیوں کا سعودی عرب پر ایک اور ڈرون (drone aircraft)حملہ

drone aircraft

اتحادی افواج کی جانب سے جازان کے علاقے کی جانب بھیجا گیا ڈرون(drone aircraft) راستے میں ہی تباہ کر دیا گیا

ریاض ( تازہ ترین اخبار۔ 27جولائی 2019ء) حوثی باغیوں کی جانب سے گزشتہ روز
ایک بار پھر سعودی عرب کے سرحدی شہر جازان کو ڈرون(drone aircraft) حملوں سے نشانہ بنانے
کی کوشش کی گئی، تاہم یہ ڈرون اپنے ہدف پر پہنچنے سے قبل ہی مار گرایا گیا۔ سعودی
عرب کی زیر قیادت فوجی اتحاد کے ترجمان کرنل تُرکی المالکی نے کہا کہ ایران کے
حمایت یافتہ حوثی باغیوں کی جانب سے مسلسل سرحدی خلاف ورزیاں کی جارہی ہیں۔

جمعرات کی شب بھی حوثی باغیوں کی جانب سے سعودی عرب کی جانب ڈرون (drone aircraft)
بھیجا گیا تھا جسے اتحادی فورسز نے ناکام بناتے ہوئے ان کا ڈرون یمن کی سرحد میں ہی تباہ کر
دیا تھا۔جس کے بعد جمعہ کی صبح ایک اور ڈرون حملہ کیا گیا مگرفضائی فوج کی بروقت کارروائی
اور مستعدی کے باعث یہ ڈرون اپنے ہدف پر پہنچنے سے قبل ہی مارگرایا گیا۔

ایف بی آرنے درآمدی موبائل (mobile)پر ایکسائز ڈیوٹی سلیب جاری

چوبیس گھنٹے میں یہ دوسرا حملہ ہے جسے اتحادی افواج نے ناکام بنایا ہے۔

کرنل المالکی نے مزید کہا کہ ایران نواز حوثی باغیوں کی جانب سے مسلسل بین
الاقوامی قوانین کی خلاف ورزی کا عمل جاری ہے۔ انہوں نے عالمی برادری پر
زور دیا کہ وہ اس کا سخت نوٹس لے۔ ان کا کہنا تھا کہ حوثیوں کی جانب سے
مسلسل عوامی و شہری تنصیبات کو نشانہ بنایا جا رہا ہے جو اخلاقی اور انسانی
اقدار و قوانین کی خلاف ورزی ہے۔ کرنل المالکی نے مزید کہا کہ ایران نواز
حوثی باغیوں کی جانب سے کیے گئے حملوں کو ہر طرح سے ناکام بنایا جائے گا۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں