بھارتی پائلٹ ابھی نندن(abhinandan) کی دوبارا انٹری فضائیہ میں

ب  تفصیلات کے مطابق بھارتی پائلٹ ابھی نندن(abhinandan) نے آج مگ 21 طیارے میں پرواز کی ۔

abhinandan

بھارتی فضائیہ کے ونگ کمانڈر ابھینندن نے سروس میں واپسی کے بعد اپنی پوزیشن سنبھال لی۔بھارتی میڈیا کے مطابق ابھینندن(abhinandan) نے آج مگ 21 طیارہ اڑایا ۔ اس موقع پر دوران پرواز ان کے ہمراہ ائیر چیف مارشل بی ایس دھنووا بھی موجود تھے۔ بھارتی میڈیا نےپھر سے دعویٰ کیا کہ 27 فروری کو ابھینندن نے پاک فضائیہ کا ایف سولہ طیارہ مار گرایا تھا۔ بھارتی میڈیا نے ابھی نندن کو بہادر ترین پائلٹ قرار دیتے ہوئے کہا کہ ابھی نندن کی رہائی پر کہا جا رہا تھا کہ چونکہ وہ پاک فوج کی حراست میں رہے لہٰذا
اب انہیں طیارہ اُڑانے کی اجازت نہیں دی جائے گی لیکن بھارتی فضائیہ نے ثابت کر دیا کہ وہ اپنے بہادر پائلٹ کے ساتھ کھڑے ہیں۔

شین وارن(shane warne) نے بے شرمی کی انتہا کردی۔بےشرمی کے ریکارڈ تور دیے

یاد رہے کہ مقبوضہ کشمیر کے ضلع پلوامہ میں 14 فروری کو ایک کار خود کش دھماکے میں 40 بھارتی فوجی ہلاک ہوئے تھے جس کا الزام بھارت نے براہ راست پاکستان پر عائد کیا تھا۔پلوامہ واقعے کے بعد صورتحال کشیدہ ہوئی اور 26 فروری کی رات بھارتی فضائیہ نے لائن ا?ف کنٹرول کی خلاف ورزی کی جس پر پاک فضائیہ کی بروقت جوابی کارروائی پر بھارتی طیارے بالاکوٹ کے قریب نصب ہتھیار پھینکتے ہوئے بھاگ نکلے تھے۔ جس کے بعد بدھ کی صبح 27 فروری کو پاک فضائیہ نے بھارت کو سرپرائز دیتے ہوئے بھارت کے دو طیارے مار گرائے جبکہ ایک بھارتی پائلٹ ونگ کمانڈر ابھی نندن(abhinandan) کو بھی گرفتار کر لیا گیا تھا۔پاک فوج نے ابھی نندن کو مشتعل ہجوم سے بچایا اور حراست میں لے لیا تھا۔ پاک فوج نے ابھی نندن کا علاج بھی کروایا۔ جس کے بعد 28 فروری کو پارلیمنٹ کے مشترکہ اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے وزیراعظم اسلامی جمہوریہ پاکستان عمران خان نے بھارتی پائلٹ کی رہائی کا اعلان کیا اور ساتھ ہی کہا کہ ہم بھارتی پائلٹ کو امن کے فروغ کے لیے جذبہ خیر سگالی کے تحت رہا کر رہے ہیں۔وزیراعظم عمران خان کے اس فیصلے کو نہ صرف پاکستان اور بھارت بلکہ عالمی سطح پر بھی خوب سراہا گیا تھا۔ جمعہ کے روز یکم مارچ کو بھارتی پائلٹ ابھی نندن کو پاکستان نے جذبہ خیر سگالی کے تحت واہگہ بارڈر پر بھارت کے حوالے کر دیا تھا۔ بھارتی فضائیہ نے پاک فوج کی حراست میں رہنے والے پائلٹ کو ہیرو بنا کر پیش کیا تھا جبکہ 15 اگست کے موقع پر ابھی نندن (abhinandan)کو ویر چاکرا ایوارڈ بھی دیا گیا۔ تاہم اب ابھی نندن کی سروس میں واپسی ہو گئی ہے

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں