مقبوضہ کشمیر میں بھارتی مظالم کے خلاف لندن(london) میں احتجاج کیا گیا

کشمیریوں کے جلوس کے روٹ پر ٹریفک جام،15 ارکان پارلیمنٹ نے 10 ڈاؤننگ اسٹریٹ پر پیٹیشن پیش کی

london

لندن(london)(اخبارتازہ ترین – این این آئی۔ 04 ستمبر2019ء) مقبوضہ کشمیرمیں بھارتی مظالم کے خلاف لندن میں احتجاج کیا گیا، مظاہرین نے گاندھی کے مجسمے کو بھی کشمیری پرچم تھما دیا۔کشمیریوں کے جلوس کے روٹ پر ٹریفک مکمل جام ہوگیا۔ بعد ازاں کشمیریوں کے مظاہرے کے دوران 15 ارکان پارلیمنٹ نے 10 ڈاؤننگ اسٹریٹ پر پیٹیشن پیش کی۔ شرکاء کی جانب سے بھارتی ہائی کمیشن کے دروازے پر انڈوں، ٹماٹروں کی بارش کی گئی، بھارتی ہائی کمیشن کے باہر دھویں کے گولے پھینکے گئے اور مشتعل مظاہرین نے بھارتی ہائی کمیشن کے شیشے توڑ دئیے۔

بجلی(electricity) ایک روپے 93 پیسے مہنگی کرنے کی درخواست

غیرملکی خبررساں ادارے کے مطابق مظاہرین کی بڑی تعداد نے مطاہرے میں شرکت کی، جس میں پاکستانی اور کشمیری شہری شامل تھے۔مظاہرین نے پارلیمنٹ اسکوائر پر احتجاج کے بعد ریلی کی شکل میں بھارتی ہائی کمیشن جا کر احتجاج ریکارڈ کرایا۔لندن میں بھارتی ہائی کمیشن کو مظاہرین نے گھیرے میں لے کر بھارتی وزیراعظم نریندر مودی کے خلاف زبردست نعرے بازی کی۔کشمیریوں کے جلوس کے روٹ پر ٹریفک مکمل جام ہوگیا۔ بعد ازاں کشمیریوں کے مظاہرے کے دوران 15 ارکان پارلیمنٹ نے 10 ڈاؤننگ اسٹریٹ پر پیٹیشن پیش کی۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں