باکسر محمد وسیم(Muhammad Waseem) کی شایان شان پذیرائی نہ ہونے پر قومی کرکٹ ٹیم کے سابق کپتان وسیم اکرم خاصے دلبرداشتہ

Muhammad Waseem

محمد وسیم(Muhammad Waseem) نے فلپائنی حریف کو پہلے ہی رائونڈ میں ناک آوٹ کر تے ہوئے جیت کشمیریوں کے نام کی تھی،
اس حوالے سے چند حکومتی ارباب اختیار کے سوشل میڈیا پر پیغامات تو آئے لیکن ایئرپورٹ پر استقبال کے
لیے کوئی نہیں آیا۔سماجی رابطوں کی ویب سائٹ کا سہارا لیتے ہوئے محمد وسیم نے کہا کہ ائیرپورٹ پر
استقبال کے لیے مقابلوں میں شریک نہیں ہوتا،میرا مقصد یہ ہوتا ہے کہ عالمی سطح پر پاکستان کا استقبال ہو،
ہر تربیتی کیمپ، مقابلہ اور ٹور میرے لیے یہ ثابت کرنے کا موقع ہوتا ہے کہ پاکستان میں باکسنگ
کا کتنا ٹیلنٹ موجود ہے۔

پاکستان کی ذوالفیا نذیر(Zulfiya Nazir) نے آئی ایف اے اوپن دبئی پاور لفٹنگ چیمپئن شپ میں گولڈ میڈل حاصل کر لیا

اس معاملے پر اپنے ردعمل میں وسیم اکرم نے کہا کہ” پورے پاکستان کی طرف سے معذرت کرتا ہوں،
کبھی کبھار قومی ہیروز کی قدر نہ کرنے پر ہمیں تھپڑ مار کر جگانے کی ضرورت ہوتی ہے، محمد وسیم(Muhammad Waseem)
آئندہ فتح کا جھنڈا گاڑ کر واپس آئے تو خود ان کو لینے ائیرپورٹ جاﺅں گا، شاندار کامیابی پر ان کو
مبارکباد پیش کرتا ہوں“۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں