سکیورٹی فورسز پر حملوں میں ملوث انتہائی مطلوب دہشت گرد گرفتار

تفصیلات کے مطابق سی ٹی ڈی نے سکھر کے قریب کوٹ بنگلو کے علاقے میں کارروائی کی ، جس کے نتیجے میں کالعدم تنظیم کے دہشت گرد کی گرفتاری عمل میں لائی گئی ، جس کے قبضے سے بھاری تعداد میں بارودی مواد بھی برآمد کیا گیا۔
سی ٹی ڈی کی جانب سے بتایا گیا ہے کہ گرفتار دہشت گرد نے دوران تفتیش انکشاف کیا ہے کہ اس نے دشمن ملک سے ٹریننگ حاصل کی ، جس نے صوبہ بلوچستان میں مہران ہوٹل پر حملے میں ملوث ہونے کا اعتراف کیا جب کہ گرفتار دہشت گرد ایف سی کی گاڑیوں کو تباہ میں بھی ملوث تھا ، اس کے علاوہ اس نے سکیورٹی فورسز پر کئی دیگر حملوں کا بھی اعتراف کیا۔
اس سے پہلے قانون نافذ کرنے والے اداروں کی بروقت کارروائی کے نتیجے میں بلوچستان میں دہشت گردی کا گھناؤنہ منصوبہ ناکام بنادیا گیا۔

تفصیلات کے مطابق خفیہ اطلاعات موصول ہونے پر لیویز کوئیک رسپانس فورس کی طرف سے بلوچستان کے علاقے مستونگ میں کارروائی عمل میں لائی گئی ، جس کے نتیجے میں بھاری تعداد میں اسلحہ اور گولہ بارود مواد برآمد کرلیا جو کہ پہاڑوں میں چھپایا گیا تھا۔ لیویز حکام نے بتایا کہ اس کامیاب کارروائی کے دوران 7 آر پی جی راکٹ لانچرز بمعہ 20 راؤنڈز برآمد کیے گئے ، اس کے علاوہ اس کارروائی میں 2 ایل ایم جی مشین گنز بمعہ 4 راونڈز، آٹو گرنیڈ لانچر، 5 سو گرنیڈز ڈیٹونیٹرز، 50 آئی ای ڈی ڈیٹونیٹرز بھی برآمد کیے گئے جو کہ صوبے میں دہشت گردی کی مختلف کارروائیوں میں استعمال کرنے کی غرض سے جمع کیا گیا تھا۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں